دلچسپ و عجیب وا قعات – Tareekhi Waqiat Official Urdu Website
You are here
Home > دلچسپ و عجیب وا قعات

کالی نازیہ

نازیہ کی نئی نئی شادی ہوئی تھی۔ پہلے پہل تو سب ہی خوش اخلاقی سے پیش آتے رہے پھر آہستہ آہستہ میٹھے بولوں کی پرت اترنا شروع ہوئی ۔ دبے دبے لفظوں میں نازیہ کی پکی رنگت پر باتیں ہونے لگیں۔ نازیہ کی چار نندیں تھیں۔ نازیہ کے شوہر طاہر

پریشان مت ہو

ایک پروفیسر اپنی کلاس کو پڑھا رہا تھا کہ اس نے کلاس میں ایک لطیفہ سنایا اور سارے لڑکے ہنسنے لگ گئے۔ اس نے ایک بار پھر وہی لطیفہ دہرایا، اس بار بھی آدھے لڑکے پھر سے ہنسے۔ پروفیسر نے ایک تجربہ کرنے کی غرض سے ایک بار پھر سے

شرفو

حاجی صاحب کچھ پیسے مل جائیں گے‘میری بیوی سخت بیمار ہے‘شرفو نے ہاتھ جوڑکر ان سے درخواست کی۔ وہ حاجی صاحب کا ڈرائیور تھا۔کئی برسوں سے ان کے ہاں ملازم تھا۔پیچھے کچی بستی کی جھگیوں میں رہتا تھا۔کوئی اولاد نہ تھی۔بس وہ اور اس کی بیوی رحیماں،جو اس کی کل

بچی کا نکاح

ایک صاحب کی بیٹی کی شادی ہونی تھی۔ اس نے ایک سال پہلے اس کی پلاننگ شروع کر دی۔ کارڈ چھپوائے اور بڑے پیسے خرچ کیے۔ حتیٰ کہ اس نے یہاں تک انتظام کیا کہ اس نے بارات کے ساتھ آنے والے ہر مہمان کے گلے میں ایک ہزار کا

ایک شخص کا ایک بیٹا تھا، روز رات کو گھردیر سے آتاتھا

ایک شخص کا ایک بیٹا تھا، روز رات کو دیر سے آتا اور جب بھی اس سے باپ پوچھتا کہ بیٹا کہاں تھے؟ تو جھٹ سے کہتا کہ دوست کے ساتھ تھا۔ ایک دن بیٹا جب بہت زیادہ دیر سے آیا تو باپ نے کہا کہ بیٹا آج ہم آپ

میرا بھائی

یہ غالباجون 2007 کا ذکر ہے ،میں کراچی کے ایک معروف مدرسے میں چوتھے سال کاطالب علم تھا،ایک دن دوپہر کو قیلولہ کی نیت سے ابھی لیٹا ہی تھا کہ موبائل فون تھر تھر کانپنے لگا،اسکرین پر میرے سب سے بڑے بهائی(عزیزالرحمن رانا) کا نام جگ مگا رہا تھاجو کہ

باوفا بیوی کا حیران کر دینے والا واقعہ

ایک شخص کے گھر والوں نے اپنی پسند کی شادی کی وہ آدمی اس رشتے پر خوش نہیں تھا۔ پہلے دن سے ہی اس نے اپنی بیوی کو بیوی نہیں سمجھا‘ بلکہ صرف اسے اپنی نوکرانی سمجھتا تھا‘ کبھی اس نے اپنی بیوی سے ہنسی مذاق نہیں کیا‘ بس ہر

سرسوں کا بیج

کہتے ہیں چین میں کسی جگہ ایک عورت، اپنے اکلوتے بیٹے کے ساتھ ، دنیا و ما فای سے بے خبر اور اپنی دنیا میں مگن، خوش و خرم زندگی گزار رہی تھی کہ ایک دن اس کے بیٹے کی اجل آن پہنچی اور وہ اپنے خالق حقیقی سے جا

دولت، محبت اور کامیابی

ایک عورت گھر سے باہر کوڑا پھینکنے نکلی تو اس کی سامنے نظر پڑی۔ وہاں تین سفید داڑھیوں والے بابے بیٹھے ہوئے تھے۔ وہ ان کے پاس گئی اور ان کو اپنے گھر بلا لیا۔ اس نے سوچا کہ وہ بھوگے ہوں گے۔ انہوں نے پوچھا کہ کیا آپ کا

شک

ایک چھوٹا سا بچہ اور بچی کھیل رہے تھے۔ بچے کے پاس بنٹوں کی بڑی کلیکشن تھی اور لڑکی کے پاس ڈھیر ساری ٹافیاں تھیں۔ لڑکے نے لڑکی کو بولا کہ اگر تم اپنی ساری ٹافیاں مجھے دے دو تو میں بدلے میں تمہیں یہ سارے بنٹے دے دوں گا۔

Top